سی ایس ایس امتحانات میں کوٹہ سسٹم اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج

سی ایس ایس امتحانات میں کوٹہ سسٹم اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کردیا گیا جسٹس عامر فاروق نےاميدواروں کی درخواست پر ابتدائی سماعت کے بعد لارجر بنچ بنانےکيلئے معاملہ چيف جسٹس ہائيکورٹ کو بھيج ديا۔ جسٹس عامر فاروق نے سی ایس ایس امتحان پاس کرنے والے امیدواروں کی درخواست پر ابتدائی سماعت کی۔ درخواستگزاورں کے وکيل منور دگل نے موقف اپنايا کہ کوٹہ سسٹم 2013 میں ختم کردیا گیا لیکن اب بھی سی ایس ایس میں کوٹے پر بھرتیاں ہوتی ہیں۔ درخواستگزار میرٹ پر کامیاب ہوئے ہیں، مگر کوٹہ سسٹم کے باعث سيليکٹ نہ ہوسکے۔ اس دوران جسٹس عامر فاروق نے ڈپٹی اٹارنی جنرل سے پوچھا کہ کوٹہ سسٹم رکھا کیوں گیا ہے؟میرٹ کا قتل کرکے کس طرح ترقی لائی جا سکتی ہے؟ سال 1973سے آج تک ترقی نہیں آسکی۔ عدالت نے معاملہ اہم قرارديتے ہوئےلارجر بنچ بنانے کیلئے کيس چیف جسٹس ہائیکورٹ کو بھیج ديا۔