شارٹ فال 5 ہزار 53 میگاواٹ‘بجلی بحران شدت اختیار کر گیا

اسلام آباد: ملک میں بجلی کا بحران ایک مرتبہ پھر شدت اختیار کرنے لگا، مجموعی شارٹ فال 5 ہزار 53 میگاواٹ تک پہنچ گیا۔پاور ڈویژن کے زرائع کے مطابق ملک میں بجلی کی مجموعی پیداوار 21 ہزار 447 میگاواٹ جبکہ بجلی کی کل طلب 26 ہزار 500 میگاواٹ سے زائد ہوگئی ہے۔ شارٹ فال میں 5 ہزار سے زائد میگاواٹ کے فرق کے باعث لوڈشیڈنگ کا دورانیہ بھی بڑھا دیا گیا ہے۔ شہری علاقوں میں 12 جبکہ دیہی علاقوں میں شدید گرمی میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 14 گھنٹے سے زائد ہوگیا۔دوسری جانب لیسکو کی بجلی کی طلب بلند ترین سطح پر پہنچ گئی۔ ذرائع کے مطابق لیسکو میں بجلی کی طلب 5100 میگاواٹ سے تجاوز کر گئی۔ این پی سی سی کی جانب سے لیسکو کو 3750 میگاواٹ بجلی فراہم کی جا رہی ہے۔ لیسکو کا شارٹ فال 1350 میگاواٹ سے تجاوز کر گیا۔ شارٹ فال بڑھتے ہی بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ شروع ہوگیا۔شہر کے مختلف علاقوں میں 6 سے 7 گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے جبکہ دیہی علاقوں میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 8 سے 10 گھنٹے تک پہنچ گیا۔ بدترین غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ نے شہریوں کو پریشان کر دیا۔ شارٹ فال زیادہ ہونے کے باعث لیسکو انتظامیہ کی جانب سے درجنوں فیڈرز کو بیک وقت بند کر دیا جاتا ہے۔