Post With Image

پارٹی صدر کا انتخاب نہ ہونے پر ن لیگ کو نوٹس


اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے مقررہ مدت میں پارٹی صدر کا انتخاب نہ کئے جانے پر مسلم لیگ ن کو نوٹس جاری کر دیا۔ سابق وزیراعظم نواز شریف نے سپریم کورٹ سے پاناما کیس میں نااہلی کے بعد پارٹی کی صدارت چھوڑ دی تھی جس کے بعد الیکشن کمیشن نے 8 اگست کو بذریعہ نوٹس ن لیگ کو پارٹی کے نئے صدر کے انتخاب کی ہدایت کی تھی۔ مسلم لیگ (ن) کو پارٹی کے صدر کا انتخاب 45 روز کے اندر کرنا تھا تاہم مقررہ مدت کو مکمل ہوئے ایک ہفتہ گزر گیا جس کے باوجود ن لیگ صدر کا انتخاب نہ کر سکی۔ الیکشن کمیشن نے مسلم لیگ ن کے نائب صدر احسن اقبال کو ذاتی حیثیت یا وکیل کے ذریعے جواب جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے 3 اکتوبر کے لئے نوٹس جاری کر دیا۔ چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ر) سردار محمد رضا کی سربراہی میں الیکشن کمیشن تین اکتوبر کو پارٹی صدر کے انتخاب کے معاملے کی سماعت کرے گا۔


آپ کی رائے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا