Post With Image

سپریم کورٹ نے پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کو تحلیل کر دیا


سپریم کورٹ نے پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل تحلیل کر کے عبوری کمیٹی قائم کر دی۔ چیف جسٹس آف پاکستان نے اٹارنی جنرل اشتراوصاف کو پی ایم ڈی سی کا بنیادی ڈھانچہ بنانے کا حکم دے دیا۔ جسٹس ریٹائرڈ شاکراللہ جان کی سربراہی میں قائم عبوری کمیٹی میں اٹارنی جنرل، نیشنل یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز، خیبر میڈیکل یونیورسٹی، سندھ جناح میڈیکل یونیورسٹی، یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلرز، فوج کے سرجن جنرل اور پرنسپل بولان میڈیکل کالج شامل ہونگے، یہی سیٹ اپ کمیٹی بناکر میڈیکل کالجز کی انسپکشن کریگا، پی ایم ڈی سی کے سیکرٹری اپنے عہدے پربرقرار رہیں گے۔ عدالت کا کہنا ہے کہ آرڈیننس کی مدت پوری ہونے کے بعد کونسل کی قانونی حیثیت پر سوالیہ نشان ہے، پی ایم ڈی سی کی اپیلیں مسترد کی جاتی ہیں، وجوہات تحریری فیصلے میں دی جائیں گی۔ چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا اٹارنی جنرل پی ایم ڈی سی کا ڈھانچہ بنائیں گے، اس پورے عمل کی نگرانی میں خود کروں گا، پی ایم ڈی سی میں سیکرٹری کا عہدے پر برقرار رہے گا۔


آپ کی رائے

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا